ہم سے رابطہ کیجیئے   پہلا صفحہ   سائیٹ کا نقشہ   انگليسي   العربيه   فارسي  


بڑوں کی باتیں > امام خمینی
یہ بات مسلّم ہے کہ بہت سی صلاحیتوں کو خود حاصل کرنا پڑتا ہے اور جب تک کوئی ان صلاحیتوں اور مہارتوں کو حاصل نہ کرلے تب تک ۔۔۔

معاشرہ میں عورتوں کا مسئلہ، دوجہت، یعنی خاندان اور معاشرہ کے دائرے میں قابل ذکر ہے۔ عورتوں کے مسائل کے بارے میں اس نظریہ کا سرچشمہ دین مبین اسلام ہے

بانی انقلاب اسلامی حضرت امام خمینی رحمت اللہ علیہ نے انقلاب میں، خواہ وہ اس کا معرض وجود میں آنے کا مرحلہ ہو یا معرض وجود میں آ جانے

” اسلام نے عورت کو“ شیئیت کے درجے سے نکال کر ایک مستقل ”شخصیت“ عطا کی ہے اور اس کو حقیقی مقام و منزلت سے آشنا بنایا ہے

عورت کسی بھی معاشرتی نظام کے انتہائی اہم ستونوں میں سے ایک ہے اور اس کی خوبی یا بدی کے معاشرے پر فیصلہ کن اثرات مرتب ہوتے ہیں

1970میں خواتین کے ایک مجمع کو امام خمینیؒ کے خطابات؛ اولاد کی تربیت میں ماں کے اہم کردار کی اہمیت؛ عورتوں کی آزادی؛ حجاب

عقل و تدبیرجیسی عام شرائط کے علاوہ دو بنیادی شرطیں ہیں جو مندرجہ ذیل ہیں-1: قانون کے بارے میں علم و آگاہی کا ہونا-2: عدالت کا ہونا